You are here:    Home      Urdu News      ٹرمپ انتظامیہ کی جانب سے فوجی تربیتی پروگرام میں کٹوتی پاکستان پر دباؤ بڑھانے کی سازش ہے

ٹرمپ انتظامیہ کی جانب سے فوجی تربیتی پروگرام میں کٹوتی پاکستان پر دباؤ بڑھانے کی سازش ہے

August 12, 2018
Published in Urdu News
Comments are off for this post.

لاہور:متحدہ مجلس عمل پنجاب کے صدر اور امیرجماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمدنے ٹرمپ حکومت کی جانب سے پاکستان کے لیے فوجی تربیتی پروگرام میں کٹوتی کرنے پر اپنے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہاہے کہ امریکہ پاکستان میں بننے والی نئی حکومت کو دباؤمیں رکھنے کی غرض سے اس قسم کے اقدامات کررہا ہے۔انٹرنیشنل ملٹری ایجوکیشن اینڈ ٹریننگ پروگرام میں66پاکستانیوں کے لیے مختص جگہ ختم کی جارہی ہے۔اسی طرح نیول اسٹاف،نیول وارکالج اور سائبر سیکیورٹی اسٹڈیزکورسزبھی بند کیے جارہے ہیں جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔امریکہ کی جانب سے اس قسم کے اقدامات سے تعلقات میں مزید خرابی ہوگی ۔انہوں نے کہاکہ امریکہ کا دوہرا معیار کھل کرسامنے آچکا ہے۔یہ کوئی پہلاواقعہ نہیں بلکہ ماضی میں بھی وہ اس قسم کے اوچھے ہتھکنڈے استعمال کرتارہا ہے۔ امریکہ کے ساتھ دوطرفہ تعلقات برابری کی سطح پر قائم ہونے چاہئیں۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان نے نائن الیون کے بعد سے فرنٹ لائن اتحادی بن کر جتنی قربانیاں دی ہیں اتنی خود امریکہ نے نہیں دیں۔اس نام نہاد جنگ میں70ہزار سے زائد پاکستانی لقمہ اجل بن چکے ہیں۔ایک سوبیس ارب ڈالر سے زائد کا نقصان پاکستانی معیشت کوپہنچا ہے اور اس کے بدلے میں ملنے والی امداد آٹے میں نمک کے برابر ہے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان میں اقتدار کی منتقلی ہورہی ہے اس لیے امریکی حکام کی جانب سے بلاوجہ ایسے گھناؤنے اقدامات کیے جارہے ہیں جن سے تعلقات میں تناؤ پیدا ہوگا۔وقت کاتقاضا ہے کہ امریکی غلامی کا طوق گلے سے اتار پھینکا جائے اور ایسی خارجہ پالیسی مرتب کی جائے جو باوقار،قومی سلامتی کی عکاس اور خودمختاری پرمبنی ہو۔ماضی کے حکمرانوں نے امریکی غلامی کا دم بھرنے کی خاطرسب سے زیادہ نقصان پاکستان کوپہنچایا ہے۔میاں مقصوداحمد نے مزیدکہاکہ پاکستان ایک آزاد،خودمختارریاست ہے۔دنیا کو ہماری آزادی،خودمختاری اور سلامتی کا احترام کرنا ہوگا۔ہماری قربانیوں کا اعتراف کیے بغیر معاملات ٹھیک نہیں ہوسکتے۔نگران حکومت دونوں ممالک کے درمیان فوجی تعلقات کے حوالے سے اہمیت کے حامل پروگرامات کوختم کرنے پر امریکی سفیر کو دفترخارجہ طلب کرکے شدیداحتجاج کرے۔دباؤکم کرنے کے لیے چین،روس،ترکی اور ایران کے ساتھ تعلقات کومضبوط کرنے کی ضرورت ہے۔

Comments are closed.

Our Mission

Jamaat views regarding the three terms ‘Al-Deen’, Divine Order’, and ‘Islamic Way of Life’ as synonyms.

Our mission of ‘Establishment of Deen’ does not mean establishing some part of it, rather establishing it in its entirety, in individual and collective life, and whether it pertains to prayers or fasting, haj or zakat, socio-economic or political issues of the life.

It is incumbent upon a believer to strive for establishing Islam in its entirety without discretion and division, and believer’s real objective is to attain Allah’s pleasure and success in the this world and hereafter, this cannot be realized without trying to establish Allah’s Deen in this world.

Contact Information

Head Office, Jamaat E Islami Punjab
Mansoora, Multan Road Lahore.

Email: info@punjabjamaat.org.pk

Phone: +92 42 35252177, +92 42 35437990-1

Fax: +92 42 35427685




Facebook   |   Twitter   |   Google Plus

Our Location