You are here:    Home      Urdu News      وزرائے خارجہ کی ملاقات کی منسوخی سے بھارت کا اصل چہرہ بے نقاب ہوگیا ہے

وزرائے خارجہ کی ملاقات کی منسوخی سے بھارت کا اصل چہرہ بے نقاب ہوگیا ہے

September 23, 2018
Published in Urdu News
Comments are off for this post.

لاہور:متحدہ مجلس عمل پنجاب کے صدر اور امیرجماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمدنے کہاہے کہ نیویارک میں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس کے موقع پرپاک بھارت وزرائے خارجہ کی ہونے والی ملاقات کو بھارت کی جانب سے منسوخ کرنااس بات کاثبوت ہے کہ انڈیا مذاکرات نہیں چاہتا۔ ہندوستان نے ہمیشہ مذاکرات سے فرارکی راہ اختیار کی ہے، اس کا بھیانک چہرہ دنیا کے سامنے عیاں ہوچکا ہے۔ماضی میں بھی بھارت محض دنیا کی نظروں میں دھول جھونکنے کے لیے مذاکرات کا ڈھونگ رچاتارہا ہے۔ہندوستان جنوبی ایشیا میں امن نہیں چاہتا یہی وجہ ہے کہ وہ افغانستان اور مقبوضہ کشمیر میں مداخلت اور ظلم کے پہاڑ توڑ رہا ہے۔پاکستان سے بھارتی ایجنٹ کل بھوشن یادیو کی گرفتاری اس کامنہ بولتاثبوت ہے کہ بلوچستان سمیت پاکستان کے دیگر حصوں میں بھی بھارت مداخلت کرکے اپنے مذموم عزائم کی تکمیل کررہا ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز منصورہ میں عوامی وفود سے گفتگوکرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہاکہ کشمیری مجاہدین اپنی سرزمین کی حفاظت اور بھارت کے غاصبانہ قبضے کے خلاف میدان عمل میں ہیں ان کودہشت گردی سے جوڑنا افسوس ناک ہے۔اصل دہشت گردی بھارت کی آٹھ لاکھ فوج مقبوضہ کشمیر میں کررہی ہے۔بھارت مقبوضہ کشمیر میں مظالم کی انتہاکرچکا ہے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان میں بدامنی پھیلانے کاذمہ داربھارت ہے۔ایک سوچی سمجھی سازش کے تحت بھارت بلوچستان میں مشرقی پاکستان جیسے حالات پیداکرکے پاکستان کی سلامتی کو نقصان پہنچانا چاہتاہے،ان سازشوں کا راستہ روکنا ہوگا۔پاکستان امن چاہتاہے ،ہماری امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھاجائے۔انہوں نے کہاکہ بھارتی ریاستی دہشت گردی اور مذاکرات ایک ساتھ جاری نہیں رہ سکتے۔آئے روزہندوستانی فورسز مقبوضہ کشمیر میں نہتے اور بے گناہ کشمیریوں کو شہید کررہی ہیں جبکہ اقوام متحدہ سمیت تمام عالمی انسانی حقوق کی تنظیمیں خاموش تماشائی بنی بیٹھی ہیں۔بھارت کے گھناؤنے چہرے کو دنیا کے سامنے بے نقاب کرنے کی ضرورت ہے۔میاں مقصوداحمد نے مزید کہاکہ جب تک ہندوستان پر انتہا پسندہندو مسلط رہیں گے تب تک جنوبی ایشیامیں امن کاقیام ممکن نہیں ہوسکتا ۔حکومت پاکستان22کروڑ عوام کے جذبات کو مدنظررکھتے ہوئے ایسی خارجہ پالیسی بنائے جو حقیقی معنوں میں کشمیریوں کی پشتیبان اور پاکستان کی عزت ووقار کی ضامن ہو۔ماضی کے حکمرانوں کی عاقبت نااندیش پالیسیوں کاخمیازہ پوری قوم بھگت رہی ہے۔

Comments are closed.

Our Mission

Jamaat views regarding the three terms ‘Al-Deen’, Divine Order’, and ‘Islamic Way of Life’ as synonyms.

Our mission of ‘Establishment of Deen’ does not mean establishing some part of it, rather establishing it in its entirety, in individual and collective life, and whether it pertains to prayers or fasting, haj or zakat, socio-economic or political issues of the life.

It is incumbent upon a believer to strive for establishing Islam in its entirety without discretion and division, and believer’s real objective is to attain Allah’s pleasure and success in the this world and hereafter, this cannot be realized without trying to establish Allah’s Deen in this world.

Contact Information

Head Office, Jamaat E Islami Punjab
Mansoora, Multan Road Lahore.

Email: info@punjabjamaat.org.pk

Phone: +92 42 35252177, +92 42 35437990-1

Fax: +92 42 35427685




Facebook   |   Twitter   |   Google Plus

Our Location