You are here:    Home      Urdu News      بھارتی آرمی چیف کی پاکستان کو سبق سکھانے کی دھمکی قابل مذمت ہے

بھارتی آرمی چیف کی پاکستان کو سبق سکھانے کی دھمکی قابل مذمت ہے

September 24, 2018
Published in Urdu News
Comments are off for this post.

لاہور:متحدہ مجلس عمل پنجاب کے صدر میاں مقصود احمدنے بھارتی آرمی چیف کی پاکستان سے بدلہ لینے کی دھمکی پر اپنے شدید ردعمل کا اظہارکرتے ہوئے کہاہے کہ انڈین آرمی چیف کی گیڈر بھبھکی سے ہم ڈرنے والے نہیں ہیں۔بھارت اپنا شوق پواکرکے دیکھ لے اسے معلوم ہوجائے گاکہ وہ کتنی بڑی غلط فہمی میں مبتلا ہے۔پاکستان پر بھارت نے حملہ کرنے کی جسارت کی تو اس کامنہ توڑ جواب دیاجائے گا۔پاکستان ایک ایٹمی ملک ہے بھارتی آرمی چیف کا غیر ذمہ دارانہ بیان تشویش ناک اور قابل مذمت ہے۔انہوں نے کہاکہ پاکستانی علاقوں میں سرجیکل اسٹرائیک کا دعویدارہندوستان آج تک اپنے عوام کو اس کا ثبوت ہی پیش نہیں کرسکا۔مذاکرات سے فرارہندوستان کی کوئی نئی بات نہیں ہے،تاریخ گواہ ہے کہ بھارت کبھی بھی مذاکراتی عمل میں سنجیدہ نہیں رہا۔انڈیا کو اس کی زبان میں جواب دینا وقت کاناگزیر تقاضا ہے۔پوری پاکستانی قوم پاک فوج کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑی ہے۔انہوں نے کہاکہ اگر بھارت نے جنگ مسلط کی تو اسے1965سے زیادہ زخم اٹھانے پڑیں گے۔پاکستان امن کاخواہاں ہے مگر تالی دونوں ہاتھوں سے بجتی ہے۔جب تک بھارت مقبوضہ کشمیر میں مظالم بند،بلوچستان میں مداخلت کاخاتمہ اور آبی جارحیت کو ترک نہیں کردیتا اس کے ساتھ خوشگوار تعلقات استوار نہیں ہوسکتے۔انہوں نے کہاکہ پاکستان ایک آزاد اورخودمختار ملک ہے۔ہم امریکہ سمیت تمام ممالک کے ساتھ برابری کی سطح پر تعلقات قائم کرنا چاہتے ہیں۔ماضی کے حکمرانوں نے امریکی امداد کے حصول کے لیے تمام حدود کو پارکرلیا تھا۔انہوں نے کہاکہ بھارت ہماراازلی دشمن ہے جوجنوبی ایشیا میں طاقت کاتوازن خراب کرنے کے لیے رات دن کوششیں کررہا ہے اور ان گھناؤنی سازشوں میں اسے امریکی آشیرباد حاصل ہے۔میاں مقصوداحمد نے مطالبہ کیاکہ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اقوام متحدہ کے اجلاس سے خطاب کے دوران مسئلہ کشمیر کو بھرپور انداز میں پیش کریں اوربھارت کے سیاہ کردار کوبے نقاب کیاجائے تاکہ عالمی برادری کو بھی معلوم ہوسکے کہ بھارت ایک دہشت گرد ریاست ہے جو ”را”کے ذریعے مقبوضہ کشمیر،افغانستان اور پاکستان میں حالات خراب کررہا ہے۔

Comments are closed.

Our Mission

Jamaat views regarding the three terms ‘Al-Deen’, Divine Order’, and ‘Islamic Way of Life’ as synonyms.

Our mission of ‘Establishment of Deen’ does not mean establishing some part of it, rather establishing it in its entirety, in individual and collective life, and whether it pertains to prayers or fasting, haj or zakat, socio-economic or political issues of the life.

It is incumbent upon a believer to strive for establishing Islam in its entirety without discretion and division, and believer’s real objective is to attain Allah’s pleasure and success in the this world and hereafter, this cannot be realized without trying to establish Allah’s Deen in this world.

Contact Information

Head Office, Jamaat E Islami Punjab
Mansoora, Multan Road Lahore.

Email: info@punjabjamaat.org.pk

Phone: +92 42 35252177, +92 42 35437990-1

Fax: +92 42 35427685




Facebook   |   Twitter   |   Google Plus

Our Location